01:09 pm
ابن سلمان ، مصر اور عالمی انقلابی  تبدیلیاں

ابن سلمان ، مصر اور عالمی انقلابی تبدیلیاں

01:09 pm

ماضی بعید میں عثمانی ترک خلافت نے حرمین شریفین سے شدید محبت کی تھی اور تاریخ میں سب سے زیادہ حرمین شریفین سے شدید محبت عظیم خدمت، قدم قدم پر توسیعات کی سعادت آل سعود بادشاہت کا اعزاز ہے۔ شاہ فہدؒ نے قرآن پاک کی طباعت، ہر ملک کی، ہر قوم، ہر قبیلہ کی زبان میں تراجم قرآن پاک کا وہ عظیم اعزاز ہے جو شاہ فہدؒ کو تا ابد حاصل رہے گا اور توسیعات مسجد نبویؐ کی عظمت اور ائیرکنڈیشنگ حرم پاک کی توسیعات بھی شاہ فہد کا ہی اعزاز، شاہ عبداللہؒ کی عظیم توسیعات مسجد الحرام، دنیا بھر میں اسلام کی مسلمانوں کی نادر خدمات، ایران سے تلخی کے جواب میں اکثر مسکراہٹیں اور روداری، عراق کو جنگ سے محفوظ کرنے اور عراق کو معتدل شیعہ سنی مشترکہ حکومت دینے کی وہ مساعی جسے امریکہ و برطانیہ نے ناکام بنایا، سعودی روایات کے اندر رہتے ہوئے سعودی عرب کو سائنس و ٹیکنالوجی کی دنیا کا ’’رہنما‘‘بنانے کی کوشش، مسلمان فقہاء کی اجتہادی مساعی و افکار کو یکجا کرکے مسلمان دنیا کے لئے ’’معاصرانہ‘‘ معاملات میں فقہی انداز کی اجتماعی اسلامی فکر پیش کرنا، اس کے لئے ریاض میں ’’المجح الفقہہ الاسلامی‘‘ (انسائیکلو پیڈیا آف اسلامی فقہہ) کا قیام یہ وہ پہچان اور عرفیت ہے جو آل سعود کی شاندار، منفرد عزت، اعزاز، شان، پہچان ہے۔ میں ایسے ہی ’’منفرد‘‘ آل سعود اعزاز پر مرمٹا تھا اور عشروں سے اس کا قلمی و فکری غیر مشروط خدمت گار، معاون، وکیل عام، رہا ہوں اور میں نے اس حوالے سے جو کچھ بھی خدمات سرانجام دی ہیں، ان پر مطمئن ہوں اور قائم بھی ہوں۔
مگر ’’مقدر‘‘ کا لکھا یوں ہوا کہ 47ویں نمبر پر موجود ابن سلمان کو اللہ تعالیٰ نے اقتدار اور بادشاہت کے اختیارات دے رکھے ہیں۔ اس کی نادانیوں، دیوان الملکی کی احسان فراموشیوں، فیصلہ سازی کے اردگرد کے لوگوں کے خود پرستانہ، متکبرانہ رویوں نے مجھے ایسی خود غرضی سعودی فرعونیت کے مدمقابل لاکھڑا کیا۔ بالکل اسی طرح جمال عبدالناصر کے عہد سے حسنی مبارک عہد تک مصر ہمیشہ سعودیہ مخالف رہا ہے۔ جمال عبدالناصر سیکولر، کمیونسٹ کی یمن میں مداخلت اصل میں شاہ فیصل کی سعودی بادشاہت کے انہدام کی جنگ تھی۔ حسنی مبارک خود کو فاتح نہر سویز سمجھتا تھا لہٰذا وہ خود کو مشرق وسطیٰ کا غیر اعلانیہ رہنما بھی سمجھتا تھا۔ مگر خدا نے اس کے تکبر وغرور کو یوں خاک میں ملایا کہ ’’عرب بہار‘‘ اسے لے ڈوبی، یہ ’’عرب بہار‘‘ اصل میں امریکی و یورپی عرب دشمن سازش تھی جس کا اصل نشانہ سعودی و خلیجی بادشاہتیں رہی ہیں اور آج بھی یہی نشانہ ہیں امریکہ و یورپ کی جارحانہ روش کے سامنے۔ صدر مرسی کا اقتدار میں آنا، امریکہ و یورپ کا مصر سے مالی تعاون ختم ہو جانا، یہ وہ ’’کمزور لمحات‘‘ تھے جس نے مصری عسکری اشرافیہ کو شاہ عبداللہؒ آل سعود کی طرف ملتجی ہونے پر مجبور کیا، ان کمزور ترین لمحات میں ماضی بعید کے آل سعود دشمن مصر کی مددکرنا مدبر شاہ عبداللہ نے ضروری سمجھا، صدر مرسی کی نادانیاں کہ وہ صدر طیب اردوان کی طرح کے عقل مند، شاطر، دور اندیش، مخالفوں اور نظریاتی کشمکش میں دوسری طرف رہنے والوں کو ہمرکاب نہ کر سکے ، لہٰذا مصری عسکری اشرافیہ کے عوامی تدبیروں سے صدر مرسی اقتدار کو منہدم کرکے جنرل عبدالفتاح السیسی کے لئے اقتدار کا دروازہ کھول دیا اور صدر عبدالفتاح السیسی نے خود کو سعودی کا ہمرکاب کر دیا۔ جواب میں سعودی عرب نے مصر کے تمام مالی معاملات جو کبھی امریکہ و یورپی امداد پر انحصار کرتے تھے پر مصر کو سعودی دست تعاون پیش کر دیا، یوں ماضی بعید کا دشمن مصر آج سعودی عرب کا دوست ہے اور ساتھی ہے۔ ابن سلمان مصر میں ہیں۔ مصر میں سرمایہ کاری کے لئے 7.7ارب ڈالر کے 14معاہدے ہوچکے ہیں۔ ابن سلمان سے دو روز پہلے بحرینی شاہ قاہرہ میں تھے اور جنرل سیسی کے ساتھ مذاکرات اور تعاون کر رہے تھے، ابن سلمان اور خلیجی شیوخ، تیز رفتار ’’عالمی‘‘ تبدیلیوں کے جلو میں مشرق وسطیٰ میں عرب سیاست و کردار کی ’’تشکیل جدید کے مراحل طے کر رہے ہیں اور یہ دنیا اب نفسانفسی کی فضا ہے۔ ہر ملک میں، ہر خطے میں آندھیوں کی طرح کی تبدیلیاں آرہی ہیں۔ دیکھیں یوکرین روس جنگ نے روس کو یورپ سے کاٹ کر ایشیائی ممالک کا ساتھی بنا دیا ہے۔ اس کا پٹرول، توانائی جو یورپ میں جاتا تھا اس کا زیادہ حصہ چین لے رہا ہے اور وہ بھی اس قیمت سے نصف پر جو یورپ کو فروخت ہوتا تھا، انڈیا، سری لنکا یہ سب اور چین سب سے زیادہ روسی پٹرول، توانائی کا خریدار 21جون کو روسی صدر اور ایرانی صدر رئیسی میں ٹیلی فون پر رابطہ ہوا، روس، ایران اور بھارت نئی تزویرانی مفاہمت کر رہے ہیں۔ یہ وہ نئی فضا ہے جہاں ابن سلمان مصر میں موجود ہیں۔ چونکہ جنرل السیسی اور صدر طیب اردوان میں شدید اختلاف ’’اخوان‘‘ کے مسئلے پر موجود رہا ہے۔ لیبیاء میں بھی ترکی کی جارحانہ موجودگی سے جنرل عبدالفتاح کو پریشانی رہی ہے۔ لہٰذا ابن سلمان کا 23جون کو ترکیہ جانے سے پہلے جنرل السیسی سے ملنا عمدہ حکمت عملی ہے مگر دلچسپ امر یہ بھی ہے کہ توہین رسالت پر ظالم مودی حکومت کے عربوں کی طرح مدمقابل آنے والے ایران کا وزیر خارجہ بھارت میں خوشگوار تعلقات کا مظہر بنا ہوا ہے میں آیت اللہ حضرات کی قابل تعریف چابکدست سفارت کاری پر حیران رہتا ہوں۔ قارئین لکھتے ہوئے تاریخ انقلاب، فکر، وژن، ادب خود بخود، بقلم خود ہوتا جائے تو میں کیا کروں؟ یوں لکھتے ہوئے میں اپنے بہت سے اچھے دوستوں کو اکثر ناراض کرتا رہتا ہوں مگر یہی تو تقدیر ہے اور یہی تو مقدر ہے۔ حدیث نبویؐ ہے ’’انسان کو جس کام کے کرنے کے لئے اللہ تعالیٰ نے پیدا کیا، اس کی ادائیگی و تکمیل کے لئے اسے صلاحیتیں، فضاء، سامان اکثر میسر کیا جاتا رہتا ہے۔ میں بھی عشروں سے وہی کچھ فکری و قلمی طور پر کرتا رہا ہوں جو میری تقدیر اور مقدر ہے زندگی، رزق، اولاد، عزت، اقتدارکی عطا ہے۔ مگر انسان اس حوالے سے خالی ہاتھ ہے۔ ابن سلمان مصر میں قدیم ہو یا جدید مصر عظیم دانش، عظیم فکر، عظیم وژن کا نام رہا ہے میں ایم اے عربی میں مصر کی جامعۃ الازہر کے اساتذہ اور ایک شامی عرب کا شاگرد ہوں۔ اخوان فکر سے ہرگز متاثر نہیں ہوسکا بلکہ ڈاکٹر طہ حسین کو پسند کرتاہوں یا ادب عربی جدید جو امریکہ میں لکھا گیا اس میں عیسائی لبرل انسانیت نواز خلیل جبران اور اس کے ’’الرابطہ القلمیۃ‘‘ کے مسلمان اور عیسائی دانشوروں کو پسند کرتا ہوں تاریخ وژن، فکر میں مصری ذہن سعودیوں سے بہت آگے ہیں۔

تازہ ترین خبریں

پرویز مشرف پاکستان میں موجود ہیں اور میر ےجاننے والے ڈاکٹر خود ملکر آئے ہیں، سینئر صحافی کا تہلکہ خیز دعویٰ

پرویز مشرف پاکستان میں موجود ہیں اور میر ےجاننے والے ڈاکٹر خود ملکر آئے ہیں، سینئر صحافی کا تہلکہ خیز دعویٰ

موٹرسائیکل غریب کی پہنچ سے دور ہو گیا، قیمتوں میں مزید 3ہزار روپے تک اضافہ

موٹرسائیکل غریب کی پہنچ سے دور ہو گیا، قیمتوں میں مزید 3ہزار روپے تک اضافہ

عمران خان زندہ باد، پی ٹی آئی رہنما نے استعفیٰ دیدیا

عمران خان زندہ باد، پی ٹی آئی رہنما نے استعفیٰ دیدیا

پارٹی کیساتھ اختلافات، شاہ محمود قریشی نے خاموشی توڑتے ہوئے بڑا اعلان کر دیا

پارٹی کیساتھ اختلافات، شاہ محمود قریشی نے خاموشی توڑتے ہوئے بڑا اعلان کر دیا

پیٹرول بحران ،حکومت نے پٹرول اور ڈیزل کی فروخت پر پابندی عائد کر دی

پیٹرول بحران ،حکومت نے پٹرول اور ڈیزل کی فروخت پر پابندی عائد کر دی

پاکستان میں برفانی جھیل پھٹ گئی، شدید طغیانی ، 2پل بہہ گئے

پاکستان میں برفانی جھیل پھٹ گئی، شدید طغیانی ، 2پل بہہ گئے

گرمی سے نجات، محکمہ موسمیات نے مون سون بارشوں کا سلسلہ شروع ہونے کی نوید سنا دی

گرمی سے نجات، محکمہ موسمیات نے مون سون بارشوں کا سلسلہ شروع ہونے کی نوید سنا دی

یکم جولائی سے پیٹرول مہنگا ہوگا یا نہیں؟وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے واضح کردیا

یکم جولائی سے پیٹرول مہنگا ہوگا یا نہیں؟وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے واضح کردیا

میری بہن انگلینڈ سے آئی ہے اسے کچھ مت کہنا،برطانیہ پلٹ بہن کو لوٹنے والاکون نکلا،جان کرآپ کے ہوش اڑ جائیں گے

میری بہن انگلینڈ سے آئی ہے اسے کچھ مت کہنا،برطانیہ پلٹ بہن کو لوٹنے والاکون نکلا،جان کرآپ کے ہوش اڑ جائیں گے

مرنے والے چلے جاتے ہیں لواحقین عدالتوں کے چکر لگاتے ہیں ، عامر لیاقت کی اہلیہ کا شکوہ سامنے آگیا

مرنے والے چلے جاتے ہیں لواحقین عدالتوں کے چکر لگاتے ہیں ، عامر لیاقت کی اہلیہ کا شکوہ سامنے آگیا

پرچی چیئرمین کومقبولیت کازعم ہے تو۔۔۔مراد سعید نے بلاول بھٹو کو انکی مرضی کے حلقے میں الیکشن لڑنے کا چیلنج دیدیا

پرچی چیئرمین کومقبولیت کازعم ہے تو۔۔۔مراد سعید نے بلاول بھٹو کو انکی مرضی کے حلقے میں الیکشن لڑنے کا چیلنج دیدیا

مسائل حل نہ ہوں تو ایسی وزارت پر تھوکتے ہیں،ایم کیو ایم پاکستان کی اپوزیشن بینچوں پر بیٹھنے کی دھمکی

مسائل حل نہ ہوں تو ایسی وزارت پر تھوکتے ہیں،ایم کیو ایم پاکستان کی اپوزیشن بینچوں پر بیٹھنے کی دھمکی

بس اب ہم مزید ساتھ نہیں رہ سکتے ۔۔اسکاٹ لینڈ کا برطانیہ سے آزادی کیلئےریفرنڈم کرانے کا اعلان

بس اب ہم مزید ساتھ نہیں رہ سکتے ۔۔اسکاٹ لینڈ کا برطانیہ سے آزادی کیلئےریفرنڈم کرانے کا اعلان

خطے میں امن کیلئے عالمی شراکت داروں کیساتھ تعاون کیلئے پرعزم ہیں، آرمی چیف

خطے میں امن کیلئے عالمی شراکت داروں کیساتھ تعاون کیلئے پرعزم ہیں، آرمی چیف