01:50 pm
اور اب بلوچستان

اور اب بلوچستان

01:50 pm

گزشتہ کالموں میں ‘ میں نے کراچی اور سندھ میں بارش کی تباہ کاریوں کاذکر کرتے ہوئے عوام الناس کے مصائب اور پریشانیوں کا ذکر کیاتھا۔ میرے کالموں کے علاوہ روزنامہ ’’اوصاف‘‘ کے کئی محترم اور معزز کالموں نگاروں نے بھی بارش سے ہونے والی تباہی وبربادی کا ذکر کیاتھا۔ لیکن ان تمام تحریروں اور بعض جگہ متاثرین کی تقریروں سے حکومت پر کوئی خاطرخواہ نتیجہ نہیں نکل سکاہے۔ اس وقت یہی صورتحال بلوچستان کی ہے‘ جواپنے رقبے کے لحاظ سے پاکستان کا سب سے بڑا صوبہ ہے لیکن آبادی کوئی زیادہ نہیں ہے۔ آبادی کم ہونے کے باوجود اس صوبے کی سیاسی قیادتوں نے(اس وقت بھی اور ماضی میں بھی) عوام کی بہتری وبہبود کیلئے کوئی نمایاں کام نہیں کیاہے‘ بلکہ ایک دوسرے پر الزام تراشی کرکے عوام کے تکلیف دہ مسائل سے صرف نظر کیا گیاہے۔ یہی وجہ ہے کہ بلوچستان کے عوام اکثروبیشتر اپنی محرویوں کا ذکر کرتے رہتے ہیں‘ جس کے ازالے کی ذمہ داری بلوچستان کی سیاسی قیادت پر عائد ہوتی ہے۔ لیکن ان سے بازپرس کون کرے؟ اور اگر باز پرس کی جاتی ہے تو کہاجاتاہے کہ ہمارے پاس فنڈز کی کمی ہے لیکن اٹھارویں ترمیم کے بعد صوبوں کی قیادتوں کو فنڈز کی کمی کا رونا نہیں روناچاہیے۔
بہرحال اس وقت بلوچستان کے چیف سیکرٹری کے ایک بیان کے مطابق بلوچستان کے مختلف علاقوں میں 6077 گھر تباہ ہوئے ہیں جبکہ 10,000 گھر جزوی طور پر تباہ ہوئے ہیں۔100 سے زائد افراد بارش اور سیلاب کی وجہ سے جاں بحق ہوئے ہیں۔ اس وقت بھی بلوچستان کے سینکڑوں عوام جس میں بچے‘ بوڑھے ‘ عورتیں شامل ہیں ۔ کھلے آسمان تلے زندگی ’’ بسر‘‘ کرنے پر مجبور ہیں۔ ناقابل تردید حقیقت یہ ہے کہ بلوچستان کے سیلاب زدگان کی امداد پاکستان کی فوج کے سپاہی کررہے ہیں۔ وہی دور دراز علاقوں میں جاکر ان کو محفوظ مقامات پر لے جارہے ہیں۔ مزید برآں بعض سیاسی پارٹیاں بھی بلوچستان کے عوام کی مدد کیلئے سرگرم عمل ہیں۔ جو اس بات کا ثبوت ہے کہ بلوچستان کے عوام کو تنہا نہیں چھوڑاگیاہے۔ خود وزیراعظم نے بلوچستان کے بعض علاقوں کادور کرکے صوبائی حکومت سے کہا ہے کہ ان متاثرین کے لئے کھانے پینے کا بندوبست کیاجائے۔ ان کے اس بیان سے صوبائی حکومت متحرک ہوگئی ہے بلکہ ہونا بھی چاہیے تھا کیونکہ بلوچستان کی حکومت بلوچستان کے عوام کی نمائندگی کرتی ہے‘ اس کا یہ فرض بنتاہے کہ وہ انسانی جذبے کے تحت بارش سے متاثرین کی خدمت کرے‘ تاکہ پاکستان کے عوام یہ محسوس کرسکیں کہ بلوچستان کی حکومت اپنے عوام کی خدمت میں پیش پیش ہے۔ بلوچستان کی موجودہ صورتحال کے پس منظر میں سب سے بڑی قربانی پاکستان کی فوج کے اعلیٰ افسران نے دی ہے‘ جس میں بلوچستان (کوئٹہ) کے کور کمانڈ سرفرازعلی بھی شامل ہیں‘ پاکستان کی فوج کے یہ جوان لسبیلہ اوراس کے ملحقہ علاقوں میں سیلاب کی تباہ کارویوں کاجائزہ لیتے ہوئے بلوچی عوام کی بروقت امداد اور ان کی بحالی کے سلسلے میں احکامات دے رہے تھے۔ ان افسران کو بعد میں کراچی کیلئے ہیلی کاپٹر کے ذریعے آناتھا۔ لیکن اوتھل کے علاقے کے قریب ہیلی کاپٹر گرکر تباہ ہوگیا اور تمام افسران شہید ہوگئے ۔ یہ پاکستان کی فوج اور عوام کا ناقابل تلافی نقصان ہے۔ اتنے تجربے کار فوجی ایک طویل عرصہ میں پیدا ہوتے ہیں‘ ان کی اچانک شہادت نے پاکستان آرمی کے علاوہ پوری قوم کو سوگوار کردیاہے۔ اس حادثے کی اعلیٰ سطح پر تحقیقات کی جارہی ہے۔ جس کے بعد یہ پتہ چل سکے گا کہ یہ ہیلی کاپٹر کس طرح حادثے سے دوچار ہوا ہے۔ حالانکہ جو پائلٹ ہیلی کاپٹر اڑارہے تھے‘ وہ انتہائی تجربہ کار اور ہیلی کاپٹر اڑانے کا وسیع تجربہ رکھتے تھے۔تاہم اس حادثے سے متعلق سوشل میڈیا پر بعض عناصر کے ان بے جا تبصروں سے دکھ ہوا ہے۔ ان عناصر کو یہ ادراک ہی نہیں ہے کہ پاکستان کی سالمیت اور اس کی ذمہ داری پاکستانی فوج کے علاوہ باشعور اور ذمہ دار شہریوں پر عائد ہوتی ہے۔ اگر عوام اور فوج کے درمیان اتحاد نہ ہوتو دشمن بہ آسانی پاکستان کیلئے بے پناہ مسائل پیدا کرسکتاہے۔ بلوچستان میں ایسے عناصربدرجہ اتم موجود ہیں جو بھارت کے ایما پر پاکستان کے خلاف نبردآزما ہیں‘ ہر چند کہ ان کی تعداد زیادہ نہیں ہے لیکن انہیں دشمنوں سے مالی امداد کے علاو ہ اسلحہ چلانے اور سبوتاژ کرنے کی تربیت بھی مل رہی ہے۔ بلوچستان میں یہ سلسلہ ایک طویل عرصے سے جاری ہے‘ لیکن سی پیک کی تعمیر کے دوران دہشت گردی کے واقعات میں خاصہ اضافہ ہوا ہے ‘ جس کو ہمارے فوجی اور پیرا ملٹری فورسز ان کا مقابلہ کرکے ان کا صفایا کررہے ہیں۔ بھارت کی بلوچستان کے اندر ایک ایسی پراکسی جنگ ہے جس کا مقابلہ پاکستان کی فوج اور بلوچستان کی سیاسی قیادت مل جل کر کر رہے ہیں۔ اس پراکسی جنگ میں پاکستان کے فوجیوں اور محب وطن بلوچی ‘ پختون عوام نے بے پناہ قربانیاںدی ہیں اور اب بھی دے رہے ہیں۔ پاکستانی فوج کے ان اعلیٰ افسران نے بلوچستان اور پاکستان کیلئے قربانیاں دی ہیں جو رائیگاں نہیں جائیںگی۔ اس حادثے سے یقینا پورا پاکستان سوگوار ہے اور اللہ تعالیٰ کی ذات سے امید ہے کہ اس حادثے کی تحقیقات کرکے عوام کو بھی اعتماد میںلیا جائے گاتاکہ انہیں یہ معلوم ہوسکے کہ اتنے تجربے کار فوجی افسران کا یہ ہیلی کاپٹر کس طرح گرا ؟ کیا اس کے پیچھے کوئی سازش تھی؟

تازہ ترین خبریں

محکمہ موسمیات نے گرمی سےپریشان شہریو ں کو مزیدبارشوں کی نوید سنا دی

محکمہ موسمیات نے گرمی سےپریشان شہریو ں کو مزیدبارشوں کی نوید سنا دی

کامن ویلتھ گیمز میں گولڈ میڈل جیتنے کے بعد ارشد ندیم کیلئے 50لاکھ روپے انعام کا اعلان

کامن ویلتھ گیمز میں گولڈ میڈل جیتنے کے بعد ارشد ندیم کیلئے 50لاکھ روپے انعام کا اعلان

پرویز الٰہی تو چوہدری شجاعت کا نہ ہو سکا آپکا کیا ہو گا،کس نے عمران خان پر طنز کر دیا؟

پرویز الٰہی تو چوہدری شجاعت کا نہ ہو سکا آپکا کیا ہو گا،کس نے عمران خان پر طنز کر دیا؟

پاک فوج کیخلاف ہرزہ سرائی ، وزیر دفاع خواجہ آصف سے استعفیٰ طلب

پاک فوج کیخلاف ہرزہ سرائی ، وزیر دفاع خواجہ آصف سے استعفیٰ طلب

پنجاب میں احساس راشن پروگرام شروع کرنیکی منظوری،ماہانہ کتنے پیسے ملیں گے ،غریبوں کے لیے خوشی کی خبرآگئی

پنجاب میں احساس راشن پروگرام شروع کرنیکی منظوری،ماہانہ کتنے پیسے ملیں گے ،غریبوں کے لیے خوشی کی خبرآگئی

ارب پتی تاجرکی نئی سستی ایئر لائن نے سروس کا آغاز کر دیا

ارب پتی تاجرکی نئی سستی ایئر لائن نے سروس کا آغاز کر دیا

دلہن کے لباس میں اس پیاری بچی کو پہچان سکتے ہیں؟ 99 فیصد چاہنے والے بھی اس معصوم بچی کو پہچان نہیں سکیں گے

دلہن کے لباس میں اس پیاری بچی کو پہچان سکتے ہیں؟ 99 فیصد چاہنے والے بھی اس معصوم بچی کو پہچان نہیں سکیں گے

سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کاملکی حالات کے متعلق بڑادعویٰ

سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کاملکی حالات کے متعلق بڑادعویٰ

مہنگائی کے ستائے عوام کیلئے ایک اور بری خبر

مہنگائی کے ستائے عوام کیلئے ایک اور بری خبر

پیپلزپارٹی کا فواد چودھری کے الزامات پر ردعمل ، بڑا چیلنج دیدیا

پیپلزپارٹی کا فواد چودھری کے الزامات پر ردعمل ، بڑا چیلنج دیدیا

شہرقائد میں بادل ایک مرتبہ پھربرس پڑے ،کیامزیدبارش کاامکان ہے ،محکمہ موسمیات نے بتادیا

شہرقائد میں بادل ایک مرتبہ پھربرس پڑے ،کیامزیدبارش کاامکان ہے ،محکمہ موسمیات نے بتادیا

حکومت پی ٹی آئی کے خلاف اقدامات کیوں اٹھارہی ہے ،فواد چوہدری نے وجہ بتادی

حکومت پی ٹی آئی کے خلاف اقدامات کیوں اٹھارہی ہے ،فواد چوہدری نے وجہ بتادی

کامن ویلتھ گیمز، کس ملک کے 9 ایتھلیٹ اور منیجر روپوش ہوگئے ،کھیل کے میدان سے بڑی خبرآگئی

کامن ویلتھ گیمز، کس ملک کے 9 ایتھلیٹ اور منیجر روپوش ہوگئے ،کھیل کے میدان سے بڑی خبرآگئی

عمران خان توشہ خانہ سےکچھ تحائف مفت میں بھی لےگئے تھے، الیکشن کمیشن میں دائر ریفرنس میںبڑا دعویٰ کردیاگیا

عمران خان توشہ خانہ سےکچھ تحائف مفت میں بھی لےگئے تھے، الیکشن کمیشن میں دائر ریفرنس میںبڑا دعویٰ کردیاگیا