06:56 am
سیاہ دھبوں کا علاج اور احتیاط

سیاہ دھبوں کا علاج اور احتیاط

06:56 am

سیاہ جگہوں کو دور کرنے کے لیے نکات اور علاج سیاہ دھبے مرد اور خواتین دونوں کے لیے ایک عام مسئلہ ہے ۔یہاں ہم خاص طور پر چہرے پر سیاہ دھبوں کی علامات اور سیاہ دھبوں کو روکنے کے طریقوں کے بارے میں بات کریں گے جیسا کہ آپ آسانی سے ”چہرے کے رنگ کے دھبوں“کے عنوان سے آسانی سے سمجھ سکتے ہیں جس کا مطلب ہے کہ جلد کے غیر مساوی ہونے والے چہرے پر مختلف رنگ کے دھبوں کا ہونا۔
 
اس کی بنیادی وجہ میلانین نامی روغن میں اضافے کی وجہ سے ہے جس سے جسم کی جلد کی رنگت کا تعین ہوتاہے جینیاتیات چہرے پر سیاہ مقامات پیدا کرنے میں بھی اہم کردار ادا کرتی ہیں لیکن یووی کی کرنوں اور سورج کی روشنی کی نمائش سیاہ دھبوں کی بنیادی وجوہات ہیں۔عمر میں اضافے کے طور پر گہرادھبہ بھی تیار ہوتاہے کیونکہ عمر کے حوالے سے میلانن کی سطح میں اضافہ ہوتاہے۔ سیاہ دھبوں کی چار وجوہات ہیں۔ کپڑے: مردوں کے لیے کپڑے کا مسئلہ نہیں ہے لیکن خواتین کے لیے کپڑے ان کے جسم پر سیاہ جگہ پیدا کر سکتے ہیں۔خاص طور پر ا س وجہ سے کہ لباس کے تحت ان کی سختی اور استعمال شدہ مادے کی وجہ سے جلد کا رنگ ڈرامائی طور پر تبدیل ہو سکتاہے۔ مرد اور خواتین سخت کپڑے پہنیں تو جلد کو خارش کر سکتے ہیں اور وہ جلن پر سیاہ دھبہ پیدا کر دیں گے۔ چہرے سے بالوں کو ہٹانا: یہ معاملہ زیادہ تر خواتین میں عام ہے۔جو جہرے کے بالوں کو چربی سے ہٹانے کے لیے مختلف تکنیک آزماتی ہیں ۔جو بالواسطہ طور پر جلد کی اندرونی سطح کو تکلیف پہنچاتی ہیں اور چہرے پر سیاہ دھبوں کی وجہ بن جاتی ہیں۔خواتین مختلف کریمیں‘چمٹی یا موم استعمال کرتی ہیں لیکن اس کی جڑوں سے بالوں کو توڑنا اورکیمیکل استعمال کرنے سے جلد میں سوزش آجاتی ہے جس کی وجہ سے جلد کو مسائل کا سامنا کرنا پڑتاہے۔ ہارمونل تبدیلیاں: ہارمونل تبدیلیاں بنیادی طور پر بلوغت کی عمر میں یا خواتین کے معاملے میں حمل کے دوران ہوتی ہیں۔یہ چیز جسم کے اندر کیمیکلز کی شرح کو تبدیل کرتی ہے اور اس میں عدم توازن پیدا کرتی ہے بعض لوگوں کے لیے یہ ہارمونل تبدیلیاں ان پر اثر انداز نہیں ہوتی ہیں لیکن بعض لوگوں کے لیے وہ سیاہ دھبوں کی طرح نمودار ہوسکتی ہیں۔ کھانا: غذا میں توازن بر قراررکھنے سے صحت اورجلد پر اچھا اثر پڑتاہے لیکن بہت زیادہ کھانے سے غیر صحت بخش اثرات مرتب ہوتے ہیں جیسا کہ لیموں والے پھل کھاتے ہیں جس میں نباتاتی مادے ہوتے ہیں جو سورج کی روشنی کے سامنے آنے پر فوٹوزہر یلا ردعمل پیدا کرتاہے۔اسی طرح اگر آپ اپنے ہاتھ میں کچھ پھلوں کا رس ڈالیں اور پھر اسے سورج کی روشنی میں بے نقاب کریں تو اس سے جلد جل جائے گی اور رنگ برنگی ہو سکتی ہے۔ چہرے پر سیاہ دھبوں سے نجات کے لیے نکات: 1۔کریم کی طرح پیسٹ بنائیں جس میں کیسر‘ڈیڑھ ٹماٹر‘ہلدی اور دودھ ہوتاہے۔ہر دن اس پیسٹ کو 15منٹ تک لگائیں۔ 2۔گوبھی سیاہ دھبوں کو کم کرنے میں بھی مدد گار ثابت ہوسکتی ہے صرف گوبھی کو چہرے پر ماسک کے طور پر لگائیں۔ 3۔لیموں سیاہ دھبوں کے لیے نہیں ہے لیکن جب ایلوویرا کے ساتھ ملایا جاتاہے تو اس کا اثر مختلف ہوتاہے ۔ ایلوویرا میں لیموں کے چند قطرے ملائیں اور اسے فیس پیک کے طور پر لگائیں۔اس سے بہتر نتیجہ برآمد ہوتاہے۔ 4۔آلو کے پیسٹ کو سیاہ داغ دار جگہ پر لگائیں اور ایک سے دو گھنٹے کے لیے چھوڑ دیں اس کا بھی اثر اچھا پڑتاہے۔ 5۔گاجر کو روزانہ کھانے سے بھی سیاہ دھبے اور حلقوں کو کم کرنے میں مدد مل سکتی ہے۔

تازہ ترین خبریں