04:13 pm
’صفائی کو غیر مسلموں سے جوڑنا ٹھیک نہیں‘

’صفائی کو غیر مسلموں سے جوڑنا ٹھیک نہیں‘

04:13 pm

سوشل میڈیا صارفین کی حس مزاح جہاں بہت سے واقعات کو دلچسپ بنا کر پیش کرتی ہے وہیں اکثر ایسے ٹرینڈز اور موضوع بھی زیر بحث آ جاتے ہیں جن کے بارے میں شاید اب بھی کھل کر بات کرنا اتنا آسان نہیں۔ جیسے مذہبی تعصبات کی وجہ سے کسی کے ساتھ کھانا نہ کھانا، کسی پیشے کو کسی خاص طبقے کے لوگوں سے ہی منسلک کرنا وغیرہ وغیرہ۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کچھ دنوں سے ایک نجی سکول کی جانب سے جاری کیا گیا ایک اشتہار آج کل سوشل میڈیا پر زیر بحث ہے جس کے الفاظ یہ ہیں۔ 
مزید پڑھیں

تنخواہ ملتی ہے نہ عید ی ملتی ہے،مسیحی ملازمین

اسلام آباد میں خاکروب کا احتجاج کیوں؟
صفائی کے لیے کرسچن (عیسائی) لڑکے کی ضرورت ہے۔ صفائی کرنے والوں کے حقوق کے لیے کام کرنے والے ٹوئٹر اکاؤنٹ سویپر سپر ہیروز نے اس اشتہار کی تصویر شئیر کرتے ہوئے لکھا کہ صفائی کا کام کرنے میں کوئی عار نہیں لیکن اسے کسی ایک مذہبی طبقے سے جوڑنا دین اسلام اور آئین کے بنیادی اصولوں کے خلاف ہے۔