بھارتی اداکار ششی کپور کا انتقال نہیں ہوا بلکہ بھا رت کے رکن اسمبلی کی مو ت کی خبر بھی آگئی
  5  دسمبر‬‮  2017     |     دنیا

نئی دہلی(نیوز ڈیسک ) بالی وڈ کے لیجنڈری اداکار ششی کپور گذشتہ روز طویل علالت کے بعد انتقال کر گئے، ان کی موت پر مداحوں اور شوبز اسٹارز کی جانب سے تعزیتی پیغامات کا تانتا بندھ گیا، وہیں بھارتی سیاستدان ششی تھرور کو نام کی مماثلت کی وجہ سے کچھ پریشانی کا سامنا بھی کرنا پڑا۔ہوا کچھ یوں کہ ایک بھارتی ٹی وی چینل نے اپنی ٹوئیٹ میں ششی کپور کی وفات کی خبر دیتے ہوئے وہاں غلطی سے کانگریس رہنما اور رکن اسمبلی ششی تھرور کا نام لکھ دیا۔

بھارتی چینل کی اس غلط ٹوئیٹ کے بعد ششی تھرور کے دفتر میں تعزیتی کالز کا تانتا بندھ گیا، جس پر ششی تھرور کو وضاحت کرنی پڑی۔ششی تھرور نے اپنی ٹوئیٹ میں لکھا کہ ان کے وفات کی خبر قبل از وقت ہے۔ساتھ ہی ششی نے آنجہانی ششی کپور کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا، 'مجھے ایسا معلوم ہوتا ہے کہ میرا ایک حصہ جدا ہوگیا ہے، ششی کپور ایک عظیم اداکار اور اسمارٹ انسان تھے، ہم دونوں کے ناموں کی مماثلت پر اکثر اوقات لوگ کشمکش کا شکار ہوجاتے تھے۔انہوں نے ششی کپور کے اہلخانہ اور مداحوں س تعزیت کا اظہار کرتے ہوئےمزید کہا کہ 'میں انہیں مِس کروں گا۔بعدازاں مذکورہ چینل کی جانب سے معذرت پر ششی تھرور کا کہنا تھا کہ 'اکثر غلطیاں ہو جاتی ہیں، لیکن مجھے خوشی ہے کہ اس دکھ کی گھڑی میں میری وجہ سے کچھ لوگوں کے چہروں پر مسکراہٹ بکھر گئی۔این ڈی ٹی وی کی ایک رپورٹ کے مطابق ششی تھرور کے ایک قریبی ساتھی نے بتایا کہ رکن پارلیمنٹ ششی تھرور کے نئی دہلی میں واقع دفتر میں پیر (4 دسمبر) کی شام سے صحافیوں سمیت دیگر لوگوں کی فون کالز کا تانتا بندھ گیا، جنہوں نے ششی تھرور کے بارے میں دریافت کیا۔ششی تھرور کے ساتھی نے بتایا کہ بعدازاں ہمیں سمجھ آیا کہ ایک ٹی وی چینل کی 'غلطی' سے ہمیں لوگوں کی فون کالز کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔یاد رہے کہ پرتھوی راج کپور کے سب سے چھوٹے بیٹے اور بالی وڈ اداکار ششی کپور گذشتہ روز طویل علالت کے بعد 79 سال کی عمر میں انتقال کرگئے تھے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

دنیا

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved