نا لہ بھمبر کے دو نوں اطرا ف قبضوں اور تعمیر سے نا لہ کی چو ڑا ئی دن بد ن سکڑ نے لگی
  7  دسمبر‬‮  2017     |      کشمیر

بھمبر (ڈسٹرکٹ رپورٹر) نا لہ بھمبر کے دو نوں اطرا ف قبضوں اور تعمیر سے نا لہ کی چو ڑا ئی دن بد ن سکڑ نے لگی کسی بھی وقت بڑ ے سیلا بی ریلے سے شہر یوں کو لاکھوں کے ما لی نقصا ن کا خد شہ ،نالہ پر مسلسل قبضوں پربھمبر کی سیاسی وسما جی تنظیموں نے چپ سا دہ لی جبکہ بلد یہ بھمبر ،محکمہ ما ل ،شا ہرا ت اور ماحو لیا ت نے بھی آنکھیں بند لی تفصیلا ت کے مطا بق بھمبرکی حدود کا تعین نہ ہو نا ایک گھمبیر مسئلہ بن گیا ،میڈ یا کے بار ہا مسئلہ اٹھا نے کے با وجود انتظا میہ کے کا نوں پر جوں تک نہ رینگی ،سالہا سا ل سے مو جود آبی گزر گاہ کے کنا روں پر تعمیرا ت اور مکا نیت کا سلسلہ جاری رہنے کی وجہ سے نا لہ کی حدو د روز بروز تنگ ہو تی جارہی ہیں چند سا ل قبل زیادہ بارشوں کی وجہ سے سیلا بی پانی شہر ی آبادی میں داخل ہو گیا تھا جس سے لا کھوں رو پے کا ما لی نقصا ن ہوا لیکن اس کے باوجود نا لہ کی حدبند ی نہ ہوسکی ،محکمہ ما ل کے ذمہ داران کا موقف ہے کہ وہ اس بارے میں کو ئی ایکشن نہیں لے سکتے کیو نکہ کہ نا لہ کی حدو د کا تعین مو جود نہیں ہے اور اسکے کناروں پر لو گوں کو ذاتی ملکیتی رقبے مو جود ہیں

جن پر تعمیر ات سے انہیں قانو ناً رو کا نہیں جاسکتا میو نسپل کمیٹی بھمبر نے بھی اس پر چپ سادھ رکھی ہے جبکہ ضرورت اس با ت کی ہے کہ بلد یہ حدود کے اندر نا لہ کی چو ڑا ئی کا تعین کر دیا جا ئے اس کے سا تھ سا تھ محکمہ ما ل ،محکمہ شاہرا ت ،محکمہ ما حو لیا ت نے بھی آنکھیں بند کررکھی ہے بھمبر کی مختلف سیاسی جماعتوں مسلم لیگ نو ن ،پیپلزپا رٹی ،جما عت اسلا می ،تحر یک انصاف ،کشمیر فر یڈ م مو ومنٹ اور درجنوں سما جی تنظیموں کی جا نب سے بھی اس مسئلہ کو سنجید گی سے نہیں لیا جا رہا اگر حا لا ت یہی رہے تو اگلے چند سا لوں میں نا لہ کی حدو د بہت تنگ ہو جا ئیگی اور معمو ل سے زا ئد با رشوں کی صورت میں شہر یوں کو شدید ما لی نقصا نا ت کا سامنا کر نا پڑ ے گا حکومت ،محکمہ ما ل اور محکمہ ما حو لیات کا اس پر ہنگا می اقدا ما ت کر نے کی ضرورت ہے


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

دنیا

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved