ولی لیکس کے بانی جولین اسانج کیلئے ایکواڈور کی شہریت
  12  جنوری‬‮  2018     |     دنیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک ) ایکواڈور نے 2010 میں امریکی فوج کی خفیہ معلومات افشا کرنے والے وکی لیکس کے بانی جولین اسانج کو شہریت دے دی ہے۔ اس کی تصدیق ایکواڈور کی وزیر خارجہ ماریہ فرنینڈا اسپنوسا نے کوئٹو میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کی اور ساتھ یہ بھی کہا کہ جولین اسانج نے شہریت کی درخواست دی تھی اور وہ 12 دسمبر 2017 سے ایکواڈور کے شہری ہیں۔ماریہ فرنینڈا نے مزید کہا کہ جولین اسانج کو ایک تیسری ریاست سے جان کا خطرہ ہے، ہم نے برطانیہ کے ساتھ وکی لیکس کے بانی کے معاملے کو باوقار

طریقے سے حل کرنے کے لیے جولین اسانج کو ایکواڈور کی شہریت دی۔ ان کا کہنا تھا کہ وکی لیکس کے بانی کو شہریت دینے کا فیصلہ برطانیہ کی جانب سے جولین اسانج کو سفارتی درجہ دینے کی درخواست مسترد کرنے کے بعد کیا گیاجبکہ جولین اسانج کو سفارتی درجہ دینے کا مقصد انہیں گرفتاری سے استثنیٰ دلانا تھا۔برطانوی وزارت خارجہ کی جانب سے کہا گیا کہ ایکواڈور نے جولین اسانج کو سفارتی درجہ دینے کی درخواست دی تھی جسے مسترد کر دیا گیااور ہم اس حوالے سے ایکوارڈور حکومت کے ساتھ رابطے میں بھی نہیں ہیں۔ دوسری جانب سویڈن کی حکومت ایک ریپ کیس میں ملوث ہونے پر برطانیہ سے جولین اسانج کی حوالگی کا مطالبہ کررہی ہے تاہم وکی لیکس کے بانی نے ان الزامات کی تردید کردی ہے۔سویڈن کے پراسیکیوٹر گزشتہ برس مئی میں جولین اسانج کے خلاف زیادتی کی تحقیقات کا باب بند کر چکے ہیں، لیکن وکی لیکس کے بانی برطانوی پولیس کو ضمانت نہ لینے کے کیس میں مطلوب ہیں۔ ادھر جولین اسانج کو خدشہ ہے کہ انہیں گرفتار کر کے امریکا کے حوالے کر دیا جائے گا، جہاں ان سے 2010 میں امریکی فوج کی خفیہ معلومات افشا کرنے کے حوالے سے تحقیقات کی جائیں گی۔ خیال رہے کہ جولین اسانج نے 2012 سے برطانیہ میں ایکواڈور کے سفارتخانے میں سیاسی پناہ لے رکھی ہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

دنیا

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved