مظفرآباد،سرینگرتجارت کے دوران منشیات کے الزام میں گرفتار سید عنایت حسین شاہ کوتین سال بعد بھی رہا نہ ہو سکے
  14  مارچ‬‮  2018     |      کشمیر

مظفرآباد(سٹی رپورٹر)سرینگرتجارت کے دوران منشیات کے الزام میں گرفتار سید عنایت حسین شاہ کوتین سال بعد بھی رہا نہ ہو سکے ،سات بچیوں اور ایک بیٹے کی کفالت کرنے والا ڈرائیوربے گناسزاکاٹ رہا ہے ،بیوی بچے فاقہ کشی کا شکار ہیں،کمانے والا کوئی نہیں وزیراعظم پاکستان وآزادکشمیر،چیف آف آرمی سٹاف رہائی کیلئے خصوصی کرداراداکریں۔سید عنایت حسین شاہ کے بھائی سید شبیر حسین شاہ نے میڈیا کو بتایا کہ ان کے بڑے بھائی سید عنایت شاہ جو تین سال قبل آر پار ٹریڈ کے دوران مقبوضہ کشمیر میں منشیات کے الزام میں گرفتار ہوئے جن کو 3سال ہو گئے ہیں مگر انہیں رہائی نہ مل سکی۔

میرا بھائی جو کہ صرف ڈرائیور ہے اس کو منشیات سے کوئی تعلق نہیں تھا جبکہ اصل لوگ جن کا مال تھا ان کے خلاف آج تک کوئی کارروائی نہ ہو سکی جبکہ میرا بھائی بڑی مشکل سے اپنے ساتھ بیٹیوں اور ایک بیٹے کا پیٹ پال رہا تھا کو مقبوضہ کشمیر پولیس نے گرفتار کر لیاآج اس کے بچے فاقہ کشی کا شکار ہیں اتنے پیسے نہیں کہ وہ تعلیم حاسل کر سکیں بلکہ ہر وقت بابا کو پکارتے ہیں مگرحکومت پاکستان اور آزادکشمیر نے ابھی تک اس بے گناہ کی رہائی کیلئے کوئی کردارادا نہیں کیا سید شبیر حسین شاہ نے مزید کہا کہ وزیراعظم پاکستان ،آرمی چیف اور وزیراعظم آزادکشمیر میرے بڑے بھائی کی رہائی کیلئے اپنا کرداراداکریں۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

دنیا

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved