اسرائیلی سفیر کو ملک بدر کرنے کے بعد ترکی نے فلسطین سے متعلق ایسا اعلان کر دیا کہ پوری مسلم دنیا کہنے لگی کہ رجب طیب اردگان یہ واقعی اللہ کا شی
  17  مئی‬‮  2018     |     دنیا

انقرہ(آئی این پی)ترک صدر رجب طیب اردگان نے کہا ہے کہ حماس دہشت گرد تنظیم نہیں اور نہ ہی فلسطینی دہشت گرد ہیں،حماس فلسطینیوں کی مادرِ وطن کے تحفظ کے لیے قائم کردہ ایک مزاحمتی تنظیم ہے،ترکی فلسطین کے ساتھ کھڑا ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق صدر اردگان نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں کہا کہ حماس ایک دہشت گرد تنظیم نہیں ہے اور نہ ہی فلسطینی دہشت گرد ہیں۔ پوری دنیا کی نظروں کے سامنے ظلم و ستم کا نشانہ بنائے جانے والے فلسطینی عوام کے ساتھ ہم اظہار یک جہتی کرتے ہیں

۔صدر نے کہا ہے کہ حماس نہ تو دہشت گرد تنظیم ہے اور نہ ہی فلسطینی دہشت گرد ہیں۔انہوں نے اسرائیل کے وزیراعظم بنیا مین نتن یا ہو کو دوسری بار ٹوئٹر کے ذریعے پیغام روانہ کیا ہے۔انہوں نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں کہا کہ حماس ایک دہشت گرد تنظیم نہیں ہے اور نہ ہی فلسطینی دہشت گرد ہیں۔ پوری دنیا کی نظروں کے سامنے ظلم و ستم کا نشانہ بنائے جانے والے فلسطینی عوام کے ساتھ ہم اظہار یک جہتی کرتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ حماس فلسطینیوں کی مادرِ وطن کے تحفظ کے لیے قائم کردہ ایک مزاحمتی تنظیم ہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
90%
ٹھیک ہے
10%
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

دنیا

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved