08:22 am
امریکی اخبار نے مودی سرکار کا اصل چہرہ پوری دنیا میں بے نقاب کر دیا

امریکی اخبار نے مودی سرکار کا اصل چہرہ پوری دنیا میں بے نقاب کر دیا

08:22 am

نیویارک (نیو زڈیسک) امریکی اخبار نے بی جے پی کا بھانڈا پھوڑدیا۔واشنگٹن پوسٹ کی ایک رپورٹ کے مطابق مودی حکومت انتہا پسند افراد اور تشدد کو فروغ دے رہی ہے۔پاک بھارت کشیدگی کے بعد بھارتی میں انتہا پسندی کی لہر آئی ہے۔بھارت انتہا پسند امن کی بات کرنے
والے اپنے ہی شہریوں کو غدار کہنے لگی ہے۔مودی کی انتہا پسندی پر تنقید کرنے والوں کو نوکری سے نکالا جانے لگا ہے۔کشمیر میں فوجی کردار پر تنقید کرنے والی پروفیسر مادھو مترارے کو ملک مخالف کہا گیا۔بھارتی میڈیا نے بھی حکومت اور فورسز پر سوالات اٹھانے والوں کو غدار قرار دے دیا ہے۔گذشتہ روز بھی امریکی اخبار نیویارک ٹائمز نے خدشہ ظاہر کیا تھا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان ایٹمی جنگ چھڑنا عین ممکن ہے اور کشیدگی میں نسبتاً کمی مسئلے کا حل نہیں۔نیویارک ٹائمز نے اپنے اداریے میں لکھا کہ سرحدوں پر دونوں ملکوں کی فوج تیار اور حکومتوں کے درمیان ڈائیلاگ نہ ہونے کے برابر ہے۔اخبار لکھتا ہے کہ جب تک پاکستان اور بھارت کشمیر کے مستقبل کا فیصلہ نہیں کرتے، خوف ناک صورت حال کا سامنا رہے گا۔ نیویارک ٹائمز نے اپنے ادارئیے میں لکھا کہ بھارت کا پاکستان پر حملے میں بڑی تعداد میں دہشت گرد مارنے کا دعویٰ مشکوک ہے، نریندر مودی پاکستان کے خلاف بات کر کے ہندو قوم پرستی کو ہوا دے رہے ہیں۔اخبار نے لکھا کہ وزیراعظم پاکستان عمران خان کی جانب سے بھارتی پائلٹ کو واپس کرنا خیرسگالی کے طور پر دیکھا گیا۔ اخبار نے اپنے ادارئیے میں امریکا پر زور دیا کہ وہ دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی کے خاتمے کے لیے ثالث کا کردار ادا کرے۔امریکی اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ کے نائب ترجمان رابرٹ پلاڈینو کا ہفتہ وار پریس بریفنگ میں کہنا تھا کہ وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے دونوں ملکوں کے ساتھ خود سفارتی سطح پر رابطے کیے، بھارت اور پاکستان پر زور ڈالتے رہیں گے کہ کشیدگی ختم کرنے کیلئے اقدامات جاری رکھیں۔

تازہ ترین خبریں