10:00 am
بھارتی فضائیہ کے بعد بھارتی بحریہ بھی دنیا بھر میں مذاق بن گئی

بھارتی فضائیہ کے بعد بھارتی بحریہ بھی دنیا بھر میں مذاق بن گئی

10:00 am

نئی دہلی (نیوز ڈیسک)بھارتی فضائی کے بعد اب بھارتی نیوی کی کارگردگی بھی دنیا کے سامنے آ گئی ہے۔بھارتی ریاست کیرالہ کے کوچی شپ یارڈ میں پہلے ملکی ساختہ پہلے بحری بیٹرے ’’وکرانت‘‘‘ کے چار سب سے بہترین کمپیوٹرزکے پُرزے چوری ہو گئے ۔ بھارتی ذرائع ابلاغ کے مطابق بھارت سب سے زیادہ محفوظ مقامات میں شمار کئے جانے والے اس علاقے میں کمپیوٹر پارٹس کی چوری کو سکیورٹی لیپس مانا جارہا ہے۔کوچی شپ یارڈ لمیٹڈ کے ذرائع نے بتایا کہ وکرانت کے چار کمپیوٹرز کی ہارڈ ڈسک، رینڈم ایکسیس میموری ( آر اے ایم ) اور پروسیسر چوری ہو گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ فی الحال یہ پتہ نہیں چل سکا ہے کہ چوری کب ہوئی۔
بھارتی بحریہ کا دعویٰ ہے کہ چوری شدہ کمپیوٹر میں محفوط کی گئی معلامات شپ یارڈ سے متعلق تھیں اور کوئی بحری معلومات چوری نہیں ہوئی کیونکہ طیارہ بردار جہاز ابھی تک بحریہ کے لیے حوالے نہیں کیا گیا۔بھارتی میڈیا نے دعویٰ کیا کہ یہ چوری قومی سلامتی کے لیے خطرہ ثابت نہیں ہو سکے گی۔تاہم چین کی پیپلز لبریشن آرمی کی ویب سائٹ کے مطابق خواہ یہ چوری بھارت کی قومی سلامتی کے لیے خطرہ ہو یا نہ ہو لیکن بھارت کی ملٹری انڈسٹری ایک بار پھر دنیا کے سامنے بےنقاب ہو گئی ہے۔خیال رہے کہ طیارہ بردار جہاز وکرانت کی تیاری 2008ء میں شروع ہوئی تھی اور 2010ء میں مکمل ہونا تھا۔تجربے کے فقدان اور کمزور صنعتی ساکھ کی وجہ سے 2013ء میں بھی مکمل نہ ہو سکا جب کہ اب 2021ء میں تیار کیے جانے کی امید کی جا رہی ہے۔یہ جہاز دو مرتبہ 2011ء اور 2015 ء میں ڈرائی ڈاک سے سمندر میں بھی لایا گیا مگر یہ نقائص کا شکار رہا۔2018ء میں شپ یارڈ میں مرمت کیے جانے والا ایک تربیتی جہاز پھٹ گیا تھا تاہم وکرانت اس سے محفوظ رہا تھا۔